Main ne lamhon me

میں نے لمحوں میں گزاری ہیں ہزاروں صدیاں

وقت کی دھوپ میں پگھلا ہوا دریا دیکھا

ثمینہ گُل

Comments are closed.